پرائیڈ آف پرفارمنس اولمپین خواجہ جنید کی بیٹی پیادیس سدھارگئی، شاندار تقریب میں دنیائےہاکی کے لیجنڈزکھلاڑیوں کی شرکت

لاہور:12اپریل(پلیئرزڈاٹ پی کے) اولمپین خواجہ جنید کی بیٹی پیادیس سدھارگئی، شاندار تقریب میں دنیائے ہاکی کے لیجنڈزکھلاڑیوں کی شرکت، پاکستان بھر سے سیاسی، مذہبی،سماجی،کاروباری شخصیات سمیت شعبہ تعلیم سے وابسطہ افراد کی شرکت
تفصیلات کے ماطابق پاکستان ہاکی ٹیم کے مایہ ناز کھلاڑی ، 1994 عالمی کپ کے چیمپین پرائیڈ آف پرفارمنس اولمپین خواجہ جنید کی بیٹی ڈاکٹر خدیجہ جنید کی شادی کی تتقریب گذشتہ روز سرانجام پائی. ڈاکٹر خدیجہ جنید کی شادی وقار احمد سے ہوئی جو کہ معروف کاروباری فیملی سے تعلق رکھتے ہیں. گیریژن گولف اینڈ کنٹری کلب میں منعقد ہونے والی اس شاندار تقریب میں پاکستان بھر سے سیاسی، مذہبی، سماجی ، کاروباری شخصیات سمیت شعبہ تعلیم سے وابسطہ افراد نے شرکت کی. اس موقع پر دنیائے ہاکی کے لیجنڈزکھلاڑیوں نے بھئ اس شاندار تقریب میں شرکت کی اور پیٹی کو اپنی دعاؤں کے سائے میں رخصت کیا.
پاکستان ہاکی کے لیجنڈز ستاروں میں دنیائے ہاکی میں سب سے زیادی میڈلز رکھنے والے کھلاڑیوں میں شامل ، گولڈن پلیئر کا خطاب پانے والے کھلاڑی ، پاکستان اولمپینز فورم کے سربراہ اولمپین منظور جونیئر، دیوار چین کا خطاب پانے والے لیجنڈ اولمپیئن منظور الحسن سینئر، پاکستان ہاکی کے لیجنڈ کپتان خواجہ طارق عزیز، سابق سیکرٹری پاکستان ہاکی فیڈریشن لیجنڈ اولمپین کرنل ر سید مدثر اصغر، سابق سیکرٹری پاکستان ہاکی فیڈریشن برگیڈیئر ر مسرت اللہ خان، برگیڈیئرر خالد مختار فارانی، عالمی شہرت یافتہ پینلٹی کارنر سپیشلسٹ اولمپین خالد بشیر، سابق کپتان و کوچ قومی ہاکی ٹیم محمد ثقلین، ایگزیکٹو بورڈ ممبر پاکستان ہاکی فیڈریشن محمد قاسم خان انٹرنیشنل، محمد فیاض انٹرنیشنل، محسن رفیق انٹرنیشنل، ایشین ہاکی فیڈریشن کے ڈویلپمنٹ پروگرام کے غلام غوث انٹرنیشنل، محمد یعقوب انٹرنیشنل، اجمل خان انٹرنیشنل، قمر رضآ سابق کوچ قازقستان ہاکی ٹیم، الائیڈ بینک ہاکی ٹیم مینجر خالد سعید بٹ، جنید چٹھہ، معروف سپورٹس سائیکالوجسٹ اور یونیورسٹی آف لاہور کے شعبہ سپورٹس سائینسز کےہیڈ آف ڈیپارٹمنٹ پروفیسر ڈاکٹر جمشید احمد ، معروف سپورٹس جرنلسٹ اعجاز چوہدری اور سپورٹس مینجمنٹ انالسٹ و کانگریس ممبر پاکستان ہاکی فیڈریشن علی عباس سمیت کئی اہم شخصیات نے شرکت کی. اس موقع پر سپورٹس جرنلسٹ ایسوسی ایشن لاہورکے عہدیداران سمیت سپورٹس جرنلسٹس کی ایک کثیر تعداد بھی موجود تھی

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں